Verses

آج سوچا تو آنسو بھر آئے
مدتیں ہوگیئیں مسکرائے

دل کی نازک رگیں ٹوٹتی ہیں
یاد اتنا بھی نہ کوئی آئے

رہ گئی زندگی درد بن کے
درد دل میں چھپائے چھپائے

ہر قدم پر ادھر مڑ کے دیکھا
ان کی محفل سے ہم اٹھ تو آئے

Author

Theme by Danetsoft and Danang Probo Sayekti inspired by Maksimer