فضا خاموش تھی وقت ِ دعا تھا/rafiq sandeelvi

Verses

فضا خاموش تھی وقت ِ دعا تھا
میں قرآں کی تلاوت کر رہا تھا

لبوں پر سورہء یاسین تھی اور
مرا سینہ گرجنے لگ گیا تھا

کئی دن سے نہیں برسی تھیں آنکھیں
کہیں اندر ہی آنسو رُک گیا تھا

اُسی جانب ہی سچے راستے تھے
جدھر رُخ اونٹنی نے کر لیا تھا

قریب المرگ تھا تو اُس نے مجھکو
شفا دی تھی سکون ِ دل دیا تھا

رفیق سندیلوی